وزراء نےبھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ شرم ناک قراردےدیا

وزیراعظم عمران خان کی معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے بابری مسجد کے تعصب زدہ فیصلےپرردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت کی سب سے بڑی عدالت نے پیغام دیا کہ وہ آزاد نہیں ہے،،،بھارت میں آر ایس ایس کا نظریہ حاوی ہوچکا ہے،،،فیصلے سے ہندوستان نے اپنا سیکولر چہرہ داغ دارکردیا،،،انتہاپسند مودی نے بھارت کو انتہاپسندوں کی ریاست میں تبدیل کردیا ہے
==وفاقی وزیرفواد چوہدری نے بابری مسجد کےحوالے سے بھارتی سپریم کورٹ کے فیصلے پر افسوس کا اظہارکرتے ہوئےکہا ہے کہ بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ شرمناک ہے،،، بھارتی عدالتوں پرانتہاپسند مودی کا بے شمار دباؤ ہے،،،فیصلہ ٖغیر قانونی اورغیر اخلاقی ہے،،،
=ادھروفاقی وزیر برائے موسمیات زرتاج گل نےبابری مسجد کیس میں بھارتی سپریم کورٹ کے فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ فضل الرحمان اور ان کے والد محترم کا پیارا ہندوستان ہے،جہاں مسلمانوں کی کوئی حیثیت نہیں،اور ریاست ان کے حقوق پامال کرنا ہی جانتی ہے۔
=گورنر پنجاب چودھری سرور نے بھی مسلمان مخالف فیصلے پرتنقید کرتے ہوئے کہا ہےکہ بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ افسوس ناک ہے، سپریم کورٹ مودی حکومت کےدباوَ کی شکار ہے، فیصلہ کرتارپورراہداری کے افتتاح سے پہلےآنا تشویشناک ہے
=دوسری جانب وفاقی وزیرریلوے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ بابری مسجد فیصلے سے مسلمانوں پر زمین تنگ ہوگئی،فیصلے سے بھارت کے ٹکڑے ہو جائیں گے،،،

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.