نیب 2 ماہ میں اسحاق ڈار سے ریکوری میں ناکام،چیف جسٹس برہم

نیب 2 ماہ میں اسحاق ڈار سے ریکوری میں ناکام،چیف جسٹس برہم
چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بنچ نے سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی وطن واپسی سے متعلق کیس کی سماعت کی،عدالت نے کہا کہ نیب ابھی تک اسحاق ڈار کو واپس نہ لا سکا، برطانوی حکومت نے نیب کوسوالنامہ بھجوایاتھا،2 ماہ ہوگئے کیا پیشرفت کی گئی؟نیب وکیل جہانزیب بھروانہ نے بتایا کہ اسحاق ڈار کی واپسی کا عمل جاری ہے ،برطانوی حکومت کے خط کاجواب دے دیا ہے۔
چیف جسٹس نے نیب کی سرزنش کرتے ہوئے استفسار کیا کہ عطاالحق قاسمی اور پرویزرشید سے ریکوری کاکہاتھا،اسحاق ڈاراورفوادحسن فوادسے بھی ریکوری کاکہاتھا،کیاقومی احتساب بیورو نے ریکوری کی؟نیب کی جانب سے تاحال کچھ نہیں ہوا،صرف لیٹربازی جاری ہے
نیب وکیل نے کہا کہ سابق وزیر خزانہ کی جائیدادضبط کر لی گئی ہے ،جسٹس اعجازالاحسن نے ریمارکس دیئے کہ جائیداد ضبط کرنے کے معاملے کو دو ماہ گزر چکے ہیں،بظاہر لگتا ہے خط و کتابت ہو رہی ہے۔ وکیل نیب نے کہا کہ 2 ماہ کی مدت کل ختم ہوئی،ریکوری کریں گے،چیف جسٹس نے کہا کہ اسحاق ڈار کی واپسی سے متعلق کوئی پیشرفت نہیں ہوئی، عدالت نے اسحاق ڈاروطن واپسی سے متعلق کیس کی سماعت ایک ماہ تک ملتوی کردی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.