نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا فیصلہ

وزارت داخلہ کے ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ نوازشریف کا نام وفاقی حکومت کی واضح ہدایت کے بعد ہی ای سی ایل سے ہٹایا جائے گا۔وزارت داخلہ نے نیب سے مشاورت شروع کردی۔ای سی ایل سے نام خارج ہونے کے بعد نواز شریف اگلے ہفتے علاج کے لیے لندن روانہ ہوسکتے ہیں۔
اس سے قبل میاں نواز شریف کے بھائی، مسلم لیگ نون کے صدرمیاں شہبازشریف نے ای سی ایل سے نواز شریف کا نام نکالنے کے لیے وزارتِ داخلہ میں درخواست جمع کرائی تھی جس میں طبی بنیادوں پر نواز شریف کا نام ای سی ایل سے نکالنے کی استدعا کی گئی۔
شہباز شریف نے نواز شریف کی تیمار داری کے لیے ذاتی اور سیاسی مصروفیت ترک کر دی ہیں۔نوازشریف کوان کے اہلِ خانہ نے راضی کیا ہے کہ وہ بیرونِ ملک علاج کے لیے جائیں۔ان کے ہمراہ شہباز شریف بھی بیرونِ ملک جا سکتے ہیں۔
سابق وزیراعظم کو پلیٹلیٹس کی کمی کے باعث تشویشناک حالت میں جیل سے سروسز ہسپتال میں منتقل کیا گیا تھا جہاں 16روزان کا علاج جاری رہا۔ بعد ازاں طبی بنیادوں پر عدالت نے نواز شریف کو ابتدائی طور پر 8ہفتے کیلئے ضمانت دی تھی جس کے بعد نوازشریف ہسپتال سے اپنی رہائش گاہ جاتی امرا میں منتقل ہو گئےجہاں ان کی نگہداشت کیلئے خصوصی یونٹ بھی قائم کیاگیا تھا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.