مودی کے ایڈوینچرنے فلم”منا بھائی ایم بی بی ایس” کی یاد دلا دی

0

بالی ووڈ فلم منا بھائی ایم بی بی ایس کا وہ سین تو آپ کو ضرور یاد ہوگا جہاں سنجے دت اپنے والد کو دکھانے کیلئے بلڈنگ کو ہسپتال میں بدل کر بیڈز پر اپنے ہی ساتھیوں کو مریض بنا کر لٹا دیتے ہیں ۔
ہو بہو یہی سین بھارتی وزیراعظم کے دورہ لداخ کے دوران دہرایا گیا،، ہسپتال میں طبی آلات کا کوئی نام و نشان تھا نہ کوئی ڈرپ سینڈ دکھائی دیا ،،، ای سی جی مشین اور آکسیجن سلنڈر کا بھی نام و نشان نظر نہیں آیا۔ حتیٰ کہ ہسپتال میں بلڈ پریشر چیک کرنے کا آلہ بھی کہیں موجود نہیں تھا ۔ اور ہوتا بھی کیسے کیونکہ یہ کوئی ہسپتال تھا ہی نہیں بلکہ کانفرنس ہال تھا جس میں موجود پروجیکٹر اور سٹیج صاف گواہی دے رہے ہیں۔
مزید غور کرنے پر پتہ چلا کہ بھارتی وزیر اعظم نے اپنے جن زخمی فوجیوں کی تیمار داری کی وہ تو بالکل ہٹے کٹے تھےاوربیڈز پر ایسے بیٹھے تھے جیسے زندگی میں انہیں کبھی خراش تک نہ آئی ہو،، نہ ہاتھوں پر پٹائی کے نشان نہ سر پر کوئی پٹی، جسم یا چہرے پر بھی کسی رگڑ کے کوئی آثار نہ تھے۔ حالانکہ چینی فوجیوں نے انہیں مار مار کر ادھ موا کردیا تھا ۔
اس جعلسازی کا بھانڈا خود نریندر مودی اس وقت پھوڑ ڈالا جب انہوں نے جعلی مریضوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ شائد آپ زخمی ہیں اور ہسپتال میں ہیں۔ بھلا انہیں یہ کہنے کی کیوں ضرورت تھی حالانکہ وہ تو ہسپتال میں ملنے ہی زخمی فوجیوں سے آئے تھے ۔
مودی کی یہ ویڈیو سامنے آنے کے بعد انڈیا میں ٹوئٹر پر سنجے دت کی مشہور فلم منابھائی ایم بی بی ایس کے نام سے ٹرینڈ چل پڑا۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: