مصباح کی سلیکشن ناکام۔۔ بیٹنگ اور باؤلنگ پھر فلاپ

ہیڈ کوچ بدلا،،سیلیکٹر بدلا،، کپتان بھی بدل دیا۔۔ لیکن قومی ٹیم کے تیور نے پھر بھی نہ بدلے۔۔ ایک کے بعد ایک مایوس کن پرفارمنس۔۔
تیسرے اور فیصلہ کن ٹی ٹوئنٹی میچ میں آسٹریلیا نے پاکستان کو 10 وکٹوں سے شکست دیکر سیریز اپنے نام کرلی۔
ابتدائی دونوں میچوں میں بے رنگ نظر آنے والی پاکستانی ٹیم میں چار تبدیلیاں کی گئیں۔ جو ٹیم کی کارکردگی میں بہتری نہ لاسکی
پاکستان کی جانب سے اننگز کا آغاز امام الحق اور کپتان بابراعظم نے کیا لیکن قومی اوپنرز ایک بار پھر ناکام رہے اور بابراعظم 6 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے، محمد رضوان بھی پہلی ہی گیند پر بولڈ ہوئے جب کہ حارث سہیل ایک بار پھر ناکام رہے اور انہوں نے 8 رنز بنائے۔
پہلا میچ کھیلنے والے خوشدل شاہ بھی صرف 8 رنز بنا سکے جب کہ عماد وسیم 6 اور شاداب خان ایک رن سے آگے نہ بڑھ سکے۔
صرف افتخار احمد نے آسٹریلوی بولرز کے سامنے مزاحمت دکھائی اور وہ 37 گیندوں پر 45 رنز بنا سکے۔ پاکستان نے مقررہ 20 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 106 رنز اسکور کیے
آسٹریلیا نے پاکستان کی جانب سے دیا گیا 107 رنز کا ہدف بغیر کسی وکٹ کے نقصان کے 12 ویں اوور میں پورا کر لیا۔ ڈیوڈ وارنر 48 اور ایرون فنچ 52 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ واضح رہے کہ یہ پاکستان کی ٹی ٹوئنٹی کی تاریخ میں 10 وکٹوں سے تیسری شکست ہے

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.