مدارس کے طلباء کو جدید تعلیم سے آراستہ کرنے کی جانب اہم قدم

اپنے ایک بیان میں وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا ہے کہ حکومت ملک میں قائم 30 ہزار مدارس کو رجسٹرڈ کرے گی جبکہ انگریزی، حساب اور سائنس کو بھی مدارس کے نصاب کا حصہ بنائے گی۔وزیرتعلیم کا کہنا تھا کہ حکومت مدارس میں زیر تعلیم بچوں کے امتحانات منعقد کرے گی اور پہلا بیچ اگلے جون تک متوقع ہے۔شفقت محمود نے مزید کہا کہ پاکستان میں قائم مدارس پر الزام لگایا جاتا ہے کہ یہاں نفرت کو ہوا دی جاتی اور یہ ’دہشت گردوں کی نرسری‘ ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ ’کسی بھی مذہب اور عقائد کے خلاف نفرت آمیز تقریر کی گنجائش نہیں ہوگی، ہم مدارس کے نصاب کا جائزہ لیں گے کہ اس میں کسی مذہب اور عقائد کے خلاف نفرت آمیز مواد تو موجود نہیں۔واضح رہے کہ مدارس کو وزارت تعلیم کے ماتحت لانے کیلئے نیشنل کاؤنٹر ٹیررازم اتھارٹی نے ملک بھر کے مدارس کی جیو ٹیگنگ اور رجسٹریشن رپورٹ مرتب کرلی ہے، جو صوبوں کو فراہم کردی جائے گی۔پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل آصف غفور نے بھی مدارس کو قومی دھارے میں شامل کرکے وزارت تعلیم کے ماتحت کرنے اور مزید اصلاحات کا اعلان کیا تھا۔ان کا کہنا تھا کہ مدارس کے طلبا کا بھی حق ہے کہ ان کو درس نظامی کے ساتھ ساتھ دیگر شعبوں کی تعلیم دی جائے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.