غیر منتخب افراد کو کابینہ میں شامل کرنا آئین کی کھلی خلاف ورزی

لاہور ہائیکورٹ میں دائر نےدرخواست میں وفاقی کابینہ کی تشکیل پر اعتراض اٹھایا گیا ہے۔ درخواست گزار نے نشاندہی کی کہ کابینہ کے پانچ منتخب ارکان کو ہٹا کر ان کی جگہ غیر منتخب افراد کو کابینہ کا حصہ بنایا گیا اور وزیراعظم کا یہ اقدام قانون کے تحت غیر آئینی ہے
درخواست گزار نے اعتراض اٹھایا کہ وفاقی کابینہ میں غیر منتخب افراد کی شمولیت سے اس کی تشکیل غیر آئینی ہوگئی اور کابینہ کی عدم موجودگی میں وزیراعظم کی کوئی قانونی حیثیت نہیں رہی۔ درخواست میں سپریم کورٹ کے فیصلے کا حوالہ بھی دیا گیا ہے درخواست میں استدعا کی گئی کہ وزیراعظم عمران خان اور کابینہ میں شامل غیر منتخب مشیروں کو کام کرنے سے روکا جائے۔ درخواست پر چھ مئی کو سماعت کا امکان ہے

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.