صحتمندمریضوں کےدوبارہ ٹیسٹ پازیٹو کیوں آئے؟

0

عالمی ادارہ صحت نے اعلان کیا ہے کہ وہ ان رپورٹس کی تحقیقات کررہے ہیں کہ کرونا وائرس کے ایسے مریض جن کو صحتیاب قرار دیا، ان کا ٹیسٹ چند دن بعد پھر مثبت ہوگیا۔
عالمی ادارے کے ترجمان کے مطابق ہم ان رپورٹس سے آگاہ ہیں کہ کچھ مریضوں میں کرونا کا پولیمر چین ری ایکشن ٹیسٹ پہلے منفی آیا اور کچھ دن بعد یہی ٹیسٹ مثبت ہوگیا۔ ڈبلیو ایچ او کی گائیڈلائنز کے مطابق کووڈ 19 کے مریضوں کو اس وقت صحتیاب قرار دیا جاتا ہے جب ان کے کم از کم 2 ٹیسٹ نیگیٹو آئیں۔
ڈبلیوایچ او کے ترجمان نے اپنے بیان میں کہا کہ ہم اپنے ماہرین کے ساتھ رابطے میں ہیں اور ان مثبت کیسز کے بارے میں مزید تفصیلات جمع کررہے ہیں، یہ بہت ضروری ہے کہ جب مشبہ مریضوں کے نمونے اکٹھے کیے جائیں تو اس عمل کو درست طریقے سے مکمل کیا جائے۔
عالمی ادارہ صحت کے مطابق حالیہ تحقیقی رپورٹس سے ثابت ہوا ہے کہ کووڈ 19 کے معتدل مریضوں میں علامات کے ظاہر ہونے سے لے کر کلینیکل ریکوری تک 2 ہفتے لگتے ہیں لیکن کووڈ 19 ایک نیا مرض ہے، ہمیں مزید وبائی ڈیٹا کی ضرورت ہے تاکہ کوئی نتیجہ نکالا جاسکے

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: