سوشل میڈیا کو ریگولیٹ کرنا عوامی مفاد میں ہے، فواد چودھری

فواد چودھری نے لیگل ایڈوائزر ریما عمرکےایک ٹویٹ کا جواب دیتے ہوئےکہا کہ آپ نے کبھی بھی امریکا اور برطانیہ پر تنقید نہیں کی ہے حالانکہ وہاں اس سے زیادہ سختیاں نافذ ہیں لیکن پاکستان میں آپ زیرو ریگولیشن چاہتی ہیں۔
وفاقی وزیرنے کہا کہ ترقی یافتہ ممالک میں سخت قانون سازی پر کوئی سوال نہیں اٹھاتا تاہم جب بھی پاکستان میں کسی حوالے سے بھی قانون سازی ہوتی ہے تو غیر ضروری مخالفت شروع ہو جاتی ہے۔
فواد چودھری نےکہا ہے کہ سوشل میڈیا کو ریگولیٹ کرنا عوامی مفاد کیلئے ضروری ہے اور ان کمپنیوں کو پاکستان لاکر ان کی رجسٹریشن کا فریم ورک کرنا بھی لازمی ہے۔
وفاقی کابینہ کی منظوری کے بعد یوٹیوب، فیس بک، ٹوئٹر، ٹک ٹاک اور ڈیلی موشن سمیت دیگر تمام سوشل کمپنیوں کو آئندہ تین ماہ کے اندر اپنی رجسٹریشن کرانا ہوں گی اور اسلام آباد کے اندر اپنا دفتر لازمی قائم کرنا ہو گا، اسی طرح ان کے لیے لازمی ہوگا کہ وہ پاکستان میں رابطہ افسربھی تعینات کریں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: