سرحدوں کی بندش،ماہ رمضان میں کھجور کی قلت کا خدشہ

0
ماہ مبارک کی آمد آمد ہےاور رمضان کا چاند رواں ماہ کی 24 تاریخ کو دکھائی دینے کی توقع ہے ،،، امت مسلمہ اس رحمتوں اور برکتوں والے مہینے کی آمد پربہت خوش دکھائی دیتےہیں جبکہ روزے داروں کے لیے کھجور سے روزہ کھولنا سنت اور سحر و افطار میں کھجور کا استعمال غذائیت کے حصول کا اہم ذریعہ مانا جاتا ہے
دوسری جانب پاکستانیوں کیلئےیہ خبر باعثِ تشویش ہے کہ لاک ڈاؤن اور سرحدوں کی بندش کی وجہ سے ایران اور عراق سے کھجور کی درآمد بالکل رک چکی ہے اور ابھی سے مقامی مارکیٹ میں کھجور کی تجارت بری طرح متاثر ہے جبکہ ماہ رمضان میں کھجور کی شدید قلت کا خدشہ ہے۔
ادھر سرحدوں کی بندش کے باعث ایران اورعراق سے کھجور کی درآمد کے سودے کرنیوالے پاکستانی تاجروں کا کروڑوں روپے کا سرمایہ پھنس گیا ،،،تاجروں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ جس طرح انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر افغانستان کے ساتھ سرحد کھولی گئی اسی طرح ایران کی سرحد بھی کھولی جائے اور ایران سے کھجور کی درآمد یقینی بنائی جائے تاکہ کھجور کے تاجروں اور عوام کو ریلیف مل سکے۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: