خوشی ہے آج امریکا پاکستان کا موقف تسلیم کر رہا ہے

وزیرِ اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ہمیں اس بات کی خوشی ہے کہ آج امریکا پاکستان کو موقف تسلیم کر رہا ہے۔

وفاقی کابینہ کے اجلاس کے دوران خطاب کرتے ہوئے وزیرِ اعظم نے کہا کہ شکر ہے کہ آج عالم اقوام میں امن کے قیام کے سلسلے میں پاکستان کے کردار پر بات ہورہی ہے۔

اپنے خطاب کے دوران وزیرِ اعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان 15 سال سے عالمی طاقتوں کو یہ باور کرورہا ہے کہ افغان تنازعے کا حل طاقت کے استعمال سے ممکن نہیں ہے۔

وزیرِ اعظم نے کہا کہ پاکستان افغانستان میں امن کے لیے اپنا بھرپور کردار ادا کر رہا ہے اور اس بات کو امریکا کے خصوصی نمائندہ برائے افغانستان زلمے خلیل زاد کی قیادت میں اسلام آباد آنے والے وفد نے بھی تسلیم کیا۔

وزیرِ اعظم نے بتایا کہ زلمے خلیل زاد امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے کہنے پر پاکستان آئے اور انہوں نے پاکستان تحریک انصاف کے مؤقف کی بھی تائید کی۔

یمن جنگ سے متعلق بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان نے اس تنازع کے بارے میں ایران اور سعودی عرب سے بات چیت بھی کی ہے۔

پاکستان کی اقتصادی صورتحال پر بات کرتے ہوئے وزیرِ اعظم نے کہا کہ وزارتِ خزانہ بہت مشکل حالات میں کام کر رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ مخالفین کہہ رہے کہ ملک کے معاشی حالات خرابی کی جانب جارہے ہیں، لیکن حقیقی یہ ہے کہ پاکستان میں بیرونی سرمایہ کاری بھی آرہی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ گاڑیاں بنانے والی جاپانی کمپنی سوزوکی کمپنی نے پاکستان میں 45 کروڑ ڈالر اور معروف سافٹ ڈرنک کمپنی پیپسی نے 40 کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کا فیصلہ کیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.