جانور ہوئےقربان توخواتین نے سنبھالا کچن کا میدان

جیسےہی قربانی کےجانور ذبح ہوئےگھر کی خواتین میدان میں آگئیں،،،بکرے،دنبے اورگائے کے گوشت سے وہ وہ ڈشزتیار کرڈالیں کہ گھروالے سب ہی عش عش کراٹھے،،،رات سےہی تیارکردہ مصالحہ جات نے کھانوں کی تیاری میں خوب مدد دی۔کچن سے کھانوں کی بھینی بھینی خوشبواٹھنا شروع ہوتوبھوک بھی اپنےجوبن پرپہنچ گئی،،کہیں کوئلہ کے دم پربنے نرم نرم کبابوں کےمزے اڑائے گئے توکہیں مٹن چانپوں اور پسندوں کھانے کا مزہ دوبالاکیا۔دسترخوان کی شان بریانی اورپلاؤ بھی کسی سے پیچھےنہ رہے،،،بڑے گوشت کی یخنی میں بنائے پلاؤ نے توہرایک کواپنادیوانہ بنا ڈالا،،،پھر باری آئی تہہ لگی مصالحہ دار بریانی کی،،،جوسب سے الگ مزہ دیتی رہی، نلی نہاری اورکلیجی بھی دسترخوان کاخاصابنے،،، میٹھے میں فرنی ، کسٹرڈٹرائفل اور لب شیریں نے دسترخوان کی شان کوخوب بڑھایا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.