ترکی اوراسرائیل کےدرمیان سوشل میڈیا وار

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ترکی اور اسرائیل کے درمیان لفظی گولہ باری کا آغاز ترک صدر کے ایک بیان پر اسرائیلی وزیراعظم کی ٹویٹ سے ہوا، نیتن یاہو نے قبرص میں کردوں کے خلاف آپریشن کو نسل کشی قرار دیتے ہوئے اردگان حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔
اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو کی ٹویٹ پر ترک صدر طیب اردگان کے ترجمان ابراہیم کیلن نے طنزاً لکھا کہ کرپشن الزامات کا سامنا کرنے والے اسرائیلی وزیراعظم کُردوں کی ہمدردی سمیٹنے کی کوشش میں اپنے اندرونی مسائل سے جان نہیں چھڑا پائیں گے۔ ترک صدر کے ترجمان نے مزید لکھا کہ نیتن یاہو کو ترک صدر کے سچ بولنے پر اعتراض کرنے کے بجائے فلسطین پر اپنے قبضے اور فلسطینی شہریوں پر بہیمانہ تشدد اور نسل کشی کے عمل کو ختم کرنا چاہیئے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.