تبدیلی سرکار کا ایک اور یوٹرن

تبدیلی سرکار کی اپنےمؤقف میں تبدیلی،،، یوٹرن سرکار نے میٹرو بس منصوبے کی لاگت کے اپنے ہی مؤقف پر یوٹرن لے لیا،،، پنجاب اسمبلی میں پیش کی گئی رپورٹ میں تحریک انصاف کی اپنی حکومت نے ہی تسلیم کر لیا کہ لاہور میٹرو بس منصوبہ پر 29 ارب 42 کروڑ 42 لاکھ روپے خرچ ہوئے، جبکہ اس سے پہلے تحریک انصاف کا ہی دعویٰ تھا کہ میٹرو منصوبے پر 70 ارب روپے لگے۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ لاہور میٹرو بس سروس کا آغاز 10فروری 2013 میں ہوا، لاہور میٹرو بس پراجیکٹ لاہور ٹرانسپورٹ کمپنی کی ہدایت کے تحت 27 فروری 2012 میں شروع کیا گیا، میٹرو بس کے تعمیراتی کام کی ذمہ داری ٹیپا ایل ڈی اے کے سپرد تھی۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ میٹرو بس کا منصوبہ پیپرا رولز کے تحت دیا گیا، لاہور میٹرو بس پراجیکٹ پر اس وقت 64 بسیں چلائی جا رہی ہیں اور بسوں کی پروکیورمنٹ ٹرانسپورٹ ڈیپارٹمنٹ نے 2009 پیپرا رولز کے مطابق کی جب کہ میٹرو بس منصوبے کو چلانے کی مد میں 2018 اور 2017 میں حکومت پنجاب نے 26۔2 ارب روپے سبسڈی ادا کی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.