بغیرحکمت عملی 12 ہزار ارب قرض لینا سنگین غداری، شہبازشریف

شہبازشریف نے نجی شعبے کی جانب سے قرض لینے میں کمی پر اظہار تشویش کرتے ہوئے کہا کہ نجی شعبے کے قرض لینے میں 70 فیصد کمی پاکستانی معیشت کا نائن الیون ہے، رواں مالی سال کے 7 ماہ کی یہ صورتحال معاشی تباہی و بربادی کی دہائی ہے، اسٹیٹ بینک کی یہ رپورٹ حکومتی معاشی دعوؤں کو جھوٹ ثابت کررہی ہے۔
شہباز شریف کا کہنا تھا کہ نجی شعبے کا بینکوں سے قرض نہ لینا ثبوت ہے کہ ملک میں معیشت کا پہیہ رُک چکا ہے، 13.25 فیصد کی بلند ترین شرح سود پر فیکٹری اور کارخانے تو دور ریڑھی بھی نہیں لگ سکتی، بجلی گیس کی قیمتوں میں ریکارڈ اضافہ اور 15 فیصد مہنگائی معیشت کے لئے کورونا وائرس کی طرح مہلک ہے۔
صدر مسلم لیگ ن کہتے ہیں کہ معاشی حکمت عملی سوچے بغیر 12ہزار ارب قرض لینا قوم سے سنگین غداری اور ظلم ہے، کرپشن اورچوری میں اضافہ، نااہلی اور نالائقی معاشی تباہی کی آگ پر تیل کا کام کررہی ہے، معیشت کومے میں ہے اور ہنگامی اقدامات نہ ہوئے تو مریض کا زندہ بچنا مشکل ہوگا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: