برطانیہ میں پر نسل پرستانہ سوچ بڑھنے لگی

0

وسطی لندن کے علاقے ریجنٹ پارک کی جامع مسجد میں ظہر کی نماز کی ادائیگی کے دوران ایک سفید فام شخص نے بزرگ موذن پر چاقو سے حملہ کردیا جس کے نتیجے میں وہ شدید زخمی ہو گئے ۔موذن کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کردیا گیا،پولیس کے مطابق ان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔
واقعے کے فوری بعد نمازیوں نے ملزم کو قابو میں کرلیا اوراسے پکڑ کر پولیس کے حوالے کردیا۔ پولیس نے 29 سالہ ملزم کے خلاف اقدام قتل مقدمہ درج کرلیا ہے۔
ادھر برطانوی وزیراعظم بورس جانسن اور میئرلندن صادق خان نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے تمام متاثرہ افراد سے افسوس کا اظہار کیا ہے ۔
ایک رپورٹ کے مطابق برطانیہ میں 2013 سے 2017 تک 167 مساجد کو نشانہ بنایا گیا جبکہ اور مساجد پر حملوں کا سلسلہ 2018 اور 2019 میں بھی جاری رہا تاہم اس کے باوجود مساجد کی سیکیورٹی کے لیے کوئی خاص اقدامات نہیں اٹھائے گئے۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

%d bloggers like this: