ایچ آئی وی ایڈز سندھ سرکار کیلئے دردسر

ایچ آئی وی ایڈز سندھ سرکار کیلئے دردسر بن گیا،مرض لاڑکانہ اور دیگر شہروں کے بعد ٹھٹھہ پہنچ گیا۔ جہاں پانچ نئے کیسز رپورٹ کیے گئے ہیں۔مریضوں میں 3 مرد اور 2 خواتین شامل ہیں۔خیال رہے کہ ایڈز کا پھیلاؤ لاڑکانہ سے شروع ہوا تھا، چند روز قبل انکشاف ہوا تھا کہ لاڑکانہ میں ایڈز پھیلانے کی وجہ خود ایڈز میں مبتلا ایک ڈاکٹر ہے، جس نے اپنا متاثرہ انجکشن لگا کر متعدد افراد کو ایڈز میں مبتلا کیا۔
سندھ ہیلتھ کمیشن نے ڈاکٹر کے خلاف مقدمہ درج کر لیا تھا اور ڈاکٹر کے ذہنی معائنے کے لیے میڈیکل بورڈ بنانے کی بھی ہدایت کی تھی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.