امریکا نے شام سے رخصتِ سفر باندھ لیا

امریکی فوج نے شام سے اپنے فوجی سازوسامان کو نکالنا شروع کر دیا جبکہ وزیر خارجہ مائیک پومپیونے شام سے آخری ایرانی فوجی کو نکالے جانے تک سفارتکاری کے میدان میں سرگرم رہنے کا اعلان کیاہے۔مائیک پومپیو کا کہنا ہے کہ واشنگٹن شام سے آخری ایرانی فوجی کو نکال باہرکرنے تک سفارت کاری کو کام میں لاتا رہے گا۔

چند روزقبل وائٹ ہاؤس میں قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن نے اسرائیل کے دورے کے دوران کہا تھا کہ شام سے امریکی انخلا وہاں پر حلیفوں کے دفاع کی ضمانت کے ساتھ عمل میں آنا چاہیے۔اس وقت 2ہزارکے قریب امریکی فوجی شام میں موجود ہیں جبکہ خانہ جنگی سے تباہ حال ملک میں موجود امریکی فوجیوں کی اکثریت داعش تنظیم کے خلاف لڑنے والی مقامی فورسز کو تربیت دے رہی ہے

شاید آپ یہ بھی پسند کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.